ای وی ایم پر کیا بھروسہ

ای وی ایم پر کیا بھروسہ

اپنی پارٹی لیڈر سید محمد الطاف بخاری نے الیکشن کی بخاری میں تیل ڈالنا شروع کیا ہے، وہ ایک واحد سیاسی لیڈر ہیں ، جو فی الحال وادی اور جموں میں اپنی سیاسی سرگرمیاں جاری رکھے ہوئے ہیں ۔

انہوں نے گزشتہ روز کپواڑہ میں ایک پارٹی اجلاس میں لوگوں پر زور دیتے ہوئے کہا کہ اُنہیں ووٹ ڈالنا چاہیے اور بائیکاٹ سے پرہیز کرنا چاہیے کیونکہ بائیکاٹ سے اُن سیاستدانوں اور جماعتوں کو فائدہ پہنچ رہا ہے جو کسی کام کے نہیں ہوتے ہیں۔

پھر عوام 5برسوں تک روتے رہتے ہیں کہ انہوں نے ایسی غلطی کیوں کی ۔جہاں تک بائیکاٹ کا تعلق ہے یہ بھی سیاستدانوں نے سکھایا ہے، ورنہ لوگوں کو کہاں معلوم تھا کہ بائیکاٹ کس بلا کو کہتے ہیں ،اب اگر لوگ باہر نکل کر اپنے ووٹ کا کھل کر آزادی سے استعمال کرتے ہیں،تو کیا گارنٹی ہے کہ اُن کا ووٹ اُسی اُمید وار کو جا سکتا ہے جس کو اس نے ڈالا ہے کیونکہ ملک بھر میں یہ آوازیں اُٹھ رہی ہیں کہ ای وی ایم فراڑ ہے، اس میں ایسا سسٹم ہے کہ اندر جا کر احمد کی ٹوپی محمود کے سرلگ جاتی ہے ۔بہتر تھااگر پرانے طریقے سے ہی ووٹ کا استعمال ہو جائے ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.