کشمیر:چیری فصل اتارنے کا کام جاری، موسمی حالات سے بے تحاشا نقصان ہوا: کاشتکار

کشمیر:چیری فصل اتارنے کا کام جاری، موسمی حالات سے بے تحاشا نقصان ہوا: کاشتکار
سری نگر: وادی کشمیر میں چیری پھل (گیلاس) کو درختوں سے اتارنے کا کام شد و مد سے جاری ہے اور یہاں شہر و دیہات کے بازاروں میں اس پھل کے ڈبے میوہ دکانوں کی زینت بن گئے ہیں تاہم اس سے وابستہ کا شتکاروں کا کہنا ہے کہ ماہ اپریل میں ہوئی بارشوں سے فصل کو کافی نقصان پہنچا ہے۔بتادیں کہ وادی میں چیری کی فصل ماہ مئی کے وسط میں ہی تیار ہو کر بازاروں میں پہنچ جاتی ہے اور ماہ جولائی کے وسط تک اس کا سیزن رہتا ہے۔ چیری ایک حساس پھل ہے جس کی عمر انتہائی محدود ہوتی ہے۔
وسطی ضلع گاندربل کے گٹلی پورہ سے تعلق رکھنے والے صنوبر خان نے یو این آئی کے ساتھ بات کرتے ہوئے کہا کہ امسال بھی گذشتہ ماہ ہونے والی موسلا دھار بارشوں اور ژالہ باری سے اس فصل کو قریب 60 فیصد نقصان ہوا
انہوں نے کہا: ‘اس سال ہمیں 18 سے 22 فیصد فصل ہی حاصل ہو رہی ہے اس میں سے ہم ڈبے کس کو لائیں گے اور مزدوروں کو کیا دیں گے’۔
ان کا کہنا تھا: ‘گذشتہ ماہ کی موسلا دھار باشیں اور ژالہ باری نقصان کی بنیادی وجہ ہے اور رہی سہی کسر غیر معیاری ادوایت نے نکال دی’۔
صنوبر خان نے کہا: ‘درختوں سے جو مال اتارا جاتا ہے وہ اس قدر خراب ہے کہ سو دانوں میں سے تین دانے ٹھیک ہیں جنہیں ڈبے میں بھر دیا جاتا ہے باقی دانوں کو پھینک دیا جاتا ہے’۔
موصوف کاشتکار نے کہا کہ فصل تیار ہونے میں کافی خرچہ آتا ہے مزدوروں، دوا پاشی اور کھاد وغیرہ پر جتنا خرچہ آتا ہے امسال اس کی بھر پائی ہونا بھی ممکن نہیں ہے۔
انہوں نے کہا: ‘گاندربل میں 55 فیصد آبادی کی روزی روٹی کا انحصار فروٹ پر ہے جس میں سے چیری سے بڑی آبادی کا روز گار وابستہ ہے’۔
ان کا کہنا تھا کہ ہمارے علاقے میں ہی قریب ڈھائی ہزار افراد اس سے وابستہ ہیں۔
انہوں نے کہا ہمارے علاقے کا چیری معیاری اور کافی مشہور ہے جس سے لوگ شوق سے کھاتے ہیں۔
صنوبر خان نے کہا کہ سرکار ہماری کوئی امداد کرتی ہے نہ ہی کوئی سکیم بناتی ہے۔
انہوں نے کہا سال گذشتہ ہم نے احتجاج بھی کیا تھا لیکن وہ بھی ثمر آور ثابت نہیں ہوسکا۔
ان کا کہنا تھا کہ ہمارے لئے بھی ایک بیمہ یوجنا بنائی جانی چاہئے تاکہ وقت ضرورت ہم بھی اس سے مستفید ہوسکیں۔
کشمیر میں چار اقسام کے چیری پائے جاتے ہیں جن میں ڈبل، مشری، مخملی اور اٹلی شامل ہیں۔
طبی ماہرین کا ماننا ہے کہ چیری کا پھل صحت و تندرستی کے لئے انتہائی مفید ہے۔
ان کا کہنا ہے کہ یہ پھل دل اور بلڈ پریشر سمیت کورونا سے بچاؤ میں مدد دیتا ہے اور انسان کو مختلف انفیکشنز سے بھی محفوظ رکھتا ہے۔
چیری میں زنک، فولاد، پوٹاشیم، مینگنیز اور کاپر پایا جاتا ہے جو دل کی دھڑکن کو معمول پر رکھنے اور ہائی بلڈ پریشر کے کنٹرول میں مدد دیتے ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.