پولیس سربراہ نے سیکورٹی صورتحال کا ایک اعلیٰ سطحی میٹنگ کے دوران جائزہ لیا دہشت گردوں اور ان کے مدد گاروں کے خلاف سخت کارروائی عمل لائی جائے : پولیس چیف سوئن

پولیس سربراہ نے سیکورٹی صورتحال کا ایک اعلیٰ سطحی میٹنگ کے دوران جائزہ لیا دہشت گردوں اور ان کے مدد گاروں کے خلاف سخت کارروائی عمل لائی جائے : پولیس چیف سوئن

سری نگر: جموں وکشمیر کے پولیس سربراہ آر آر سوئن نے پیر کے روز کولگام میں سیکورٹی صورتحال کا ایک اعلیٰ سطحی میٹنگ کے دوران جائزہ لیا۔انہوں نے سیکورٹی گرڈکو مزید مضبوط کرنے کے احکامات جاری کئے۔پولیس کے ایک ترجمان نے بتایا کہ ڈائریکٹر جنرل آف پولیس آر آر سوئن نے پیر کے رو ز کولگام کا دورہ کیا اوروہاں پر ایک اعلیٰ سطحی میٹنگ کے دوران سیکورٹی منظر نامے کا جائزہ لیا۔میٹنگ میں پولیس ، آرمی ، سی آر پی ایف کے سینئر آفیسران نے شرکت کی جس دوران پولیس سربراہ نے مکمل امن و امان کے قیام کی خاطر سرگرم ملی ٹینٹوں اور دہشت گردی کے جڑوں کو ختم کرنے کی اہمیت پر زوردیا۔ایڈیشنل ڈائریکٹر جنرل آف پولیس لا اینڈ آرڈر وجے کمار اور آئی جی کشمیر ودھی کمار بردی نے پولیس سربراہ کو سیکورٹی صورتحال کے بارے میں مفصل جانکاری فراہم کی۔ ڈی جی پی نے عوام دوست پولیسنگ کی اہمیت پر زور دیتے ہوئے کہاکہ امن و امان کے ماحول کو برقرار رکھنے کی خاطر عوام دوست پالیسی ناگزیرہے۔

انہوں نے آفیسران سے مخاطب ہوتے ہوئے کہا کہ امن دشمن عناصر سے نمٹنے کے دوران عوامی جان ومال کے تحفظ کو یقینی بنایا جائے۔انہوں نے مختلف سطحوں پر اسٹیک ہولڈرز کے درمیان انٹیلی جنس معلومات کے اشتراک کے طریقہ کار کو مضبوط بنانے کے بھی احکامات جاری کئے۔آر آر سوئن نے میٹنگ کے دوران کہا :”سرحد کے اس پار موجود دہشت گرد اور ان کے ہینڈلرز جموں وکشمیر کے پر امن حالات میں رخنہ ڈالنے کی کوششوں میں مصروف ہے۔“انہوں نے مزید بتایا کہ معصوم شہریوں اور فورسز پر بزدلانہ حملے ان کی مایوسی کو صاف ظاہرکررہے ہیں۔ڈی جی پی نے آفیسران کو احکامات جاری کئے کہ دہشت گردوں اور ان کے مدد گاروں کے خلاف کارروائیاں جاری رکھی جائے اور تمام مشتبہ عناصر پر خصوصی نظر گزر رکھنے کی بھی ضرورت ہے۔

انہوں نے آفیسران کو اپنے اپنے علاقوں میں سیکورٹی گرڈ کو مضبوط کرنے اور عوام الناس کی حفاظت کویقینی بنانے پر زور دیا۔انہوں نے کہاکہ لوگ سیکورٹی ایجنسیوں کو اپنا بھر پور تعاون فراہم کر رہے ہیں۔پولیس سربراہ نے کہاکہ سیکورٹی ایجنسیوں کے درمیان قریبی تال میل سے ہی تخریب کاروں اور امن دشمن عناصر کے منصوبوں کو ناکام بنایا جاسکتا ہے۔

یو این آئی

Leave a Reply

Your email address will not be published.