شوپیاں تصادم: مہلوک جنگجو چھترا گام کے شہری پر حملے میں ملوث تھا: پولیس

شوپیاں تصادم: مہلوک جنگجو چھترا گام کے شہری پر حملے میں ملوث تھا: پولیس

سری نگر/ جنوبی کشمیر کے ضلع شوپیاں کے کیشوا چھترا گام گاؤں میں سیکورٹی فورسز اور جنگجوؤں کے درمیان تصادم آرائی کے دوران ایک جنگجو ہلاک ہوا ہے۔پولیس کا کہنا ہے کہ مہلوک جنگجو نے حال ہی میں جنگجوؤں کی صفوں میں شمولیت اختیار کی تھی اور وہ گزشتہ شب ایک عام شہری پر ہونے والے حملے میں ملوث تھا۔

سرکاری ذرائع نے بتایا کہ کیشوا چھترا گام میں ایک تصادم آرائی کے دوران ایک جنگجو ہلاک ہوا ہے۔انہوں نے کہا کہ مہلوک جنگجو کو رات بھر خود سپردگی کرنے کی اپیل کی گئی لیکن اس نے ان اپیلوں کو مسترد کیا۔ان کا کہنا تھا کہ مہلوک جنگجو کی تحویل سے ایک پستول اور کچھ گولہ بارود برآمد کیا گیا ہے۔مہلوک کی شناخت عنایت اشرف ڈار ولد محمد اشرف ڈار ساکن کیشوا شوپیاں کے بطور ہوئی ہے۔

دریں اثنا کشمیر زون پولیس نے اپنے سلسلہ وار ٹویٹس میں مہلوک جنگجو کے متعلق تفصیلات فراہم کرتے ہوئے کہا عنایت اشرف ڈار ولد اشرف ڈار ساکن کیشوا شوپیاں، جو پہلے جنگجو اعانت کار تھا اور ڈرگس میں بھی ملوث تھا، نے گزشتہ شب چھترا گام میں ضمیر حمید بٹ نامی ایک عام شہری پر گولیاں چلائیں جس کے نتیجے میں وہ شدید زخمی ہو گیا اور اس کو ہسپتال منتقل کیا گیا۔

پولیس نے کہا کہ اس کے علاوہ عنایت اپنے گاؤں اور اس کے گرد و پیش علاقے کے لوگوں کو غیر قانونی طور حاصل کئے جانے والے ہتھیاروں سے ڈرا دھمکا رہا تھا۔پولیس کا ٹویٹس میں کہنا تھا کہ عام شہری پر حملے کے بعد کئی مشکوک افراد کی تفتیش اور مصدقہ اطلاعات موصول ہونے پر کیشوا گاؤں کو محاصرے میں لیا گیا اور اس دوران عنایت نے ایک تلاشی آپریشن پارٹی پر فائرنگ شروع کر دی۔

انہوں نے کہا کہ عنات کو رات بھر سرینڈر کرنے کی اپیلیں کی گئیں لیکن اس نے ان اپیلوں کو مسترد کر دیا جس کے بعد اس کو ہلاک کر دیا گیا۔ان کا کہنا تھا کہ اس تحویل سے ایک پستول اور کچھ گولی بارود بھی برآمد کیا گیا۔

یو این آئی

Leave a Reply

Your email address will not be published.