ہمارا اگلا ٹارگیٹ پاکستانی زیر قبضہ کشمیر ہے: بھاجپا ترجمان

ہمارا اگلا ٹارگیٹ پاکستانی زیر قبضہ کشمیر ہے: بھاجپا ترجمان

سری نگر، 18اگست: بھارتیہ جنتاپارٹی کے جموں وکشمیر یونٹ کے ترجمان الطاف ٹھاکر نے دعویٰ کیا کہ آنے والے چھ ماہ کے اندر اندر پاکستانی زیر قبضہ کشمیر کو اپنے ساتھ ملا کر ہی دم لیں گے۔
انہوں نے کہا کہ ہم الیکشن کمیشن کے اس فیصلے کا خیر مقدم کرتے ہیں جس میں بتایا گیا کہ غیر مقامی شہریوں کو بھی یہاں ووٹ ڈالنے کا حق ملے گا۔
ان باتوں کا اظہار موصوف نے نامہ نگاروں سے بات چیت کے دوران کیا۔
الطاف ٹھاکر نے کہاکہ جموں وکشمیر کے نوجوان اب لال اور سبز والی سیاست نہیں بلکہ امن کے خواہاں ہے ۔
انہوں نے بتایا کہ غیر مقامی افراد کو ووٹنگ کے حقوق دینے کے بعد محبوبہ مفتی اور فاروق عبداللہ بوکھلاہٹ کا شکار ہوگئے ہیں۔
الطاف ٹھاکر کا مزید کہنا تھا کہ محبوبہ مفتی اور عمر عبداللہ کے دور اقتدار میں سینکڑوں نوجوانوں کا قتل کیا گیا ۔
انہوں نے بتایا کہ آج کا نوجوان سمجھدار ہے اور وہ ان کی باتوں میں نہیں آئیں گے۔
اُن کے مطابق غیر مقامی افراد کا ووٹنگ لسٹ میں اندراج سے نیشنل کانفرنس اور پی ڈی پی کی سیاست ختم ہو گی۔
موصوف ترجمان نے بتایا کہ ہم کشمیر کے مسئلے کو ایک ہی ٹارگیٹ میں حل کریں گے وہ یہ کہ آنے والے چھ ماہ کے اندر اندر پاکستانی زیر قبضہ کشمیر کو بھارت میں ضم کرکے رہیں گے۔
انہوں نے بتایا کہ بھاجپا کا اگلا ٹارگیٹ پاکستانی زیر قبضہ کشمیر ہے ۔

یو این آئی

Leave a Reply

Your email address will not be published.