دہلی میں مقیم پاکستانی دہشت گرد جعلی شناختی کارڈ کے ساتھ گرفتار ، اے کے 47 ، دستی بم برآمد

دہلی میں مقیم پاکستانی دہشت گرد جعلی شناختی کارڈ کے ساتھ گرفتار ، اے کے 47 ، دستی بم برآمد

نئی دہلی/ دہلی پولیس نے جعلی ہندوستانی دستاویزات کی بنیاد پر یہاں رہنے والے ایک پاکستانی دہشت گرد کو اے کے 47 اور دستی بموں کے ساتھ گرفتار کیا ہے۔

پولیس نے بتایا کہ ملزم نے یہاں جعلی دستاویزات کی بنیاد پر اپنا نام تبدیل کر کے شناختی کارڈ حاصل کیا تھا۔ وہ ایک ہندوستانی شہری کے طور پر رہ رہا تھا۔

دہلی پولیس کی اسپیشل برانچ کے ڈپٹی کمشنر پرمود سنگھ کشواہا نے منگل کو یو این آئی کو بتایا کہ گرفتار دہشت گرد کا نام محمد اشرف عرف علی ہے۔ اصل میں اس کا تعلق پاکستان کے صوبہ پنجاب سے ہے۔ اس نے جعلی دستاویزات کی بنیاد پر یہاں علی احمد نور کے نام سے شناختی کارڈ حاصل کیا تھا اور دہلی کی شاستری نگر کالونی میں رہ رہا تھا۔

خفیہ اطلاع کی بنیاد پر دہلی پولیس کی اسپیشل برانچ نے اسے جمنا پار کے لکشمی نگر علاقے سے گرفتار کیا۔
مسٹر کشواہا نے بتایا کہ جب ملزم کی تلاشی لی گئی تو اس کے قبضے سے اسلحہ برآمد ہوا۔ اس کی نشاندہی پر مہلک ہتھیار جیسے دستی بم اور اے کے 47 اور بھاری مقدار میں کارتوس برآمد ہوئے۔

ابتدائی تفتیش میں اشرف نے بتایا کہ وہ نیپال کے راستے ہندوستان میں داخل ہوا تھا۔ وہ تہواروں کے دوران یہاں کسی بڑے واقعہ کو انجام دینے آیا تھا۔

مسٹر کشواہا نے بتایا کہ اشرف کے خلاف تعزیرات ہند کی مختلف دفعات بشمول یو اے پی اے ، آرمز ایکٹ کے تحت ایف آئی آر درج کی گئی ہے۔ گرفتار دہشت گرد سے پوچھ گچھ کی جا رہی ہے۔

 

(یو این آئی)

Leave a Reply

Your email address will not be published.