بھارت میں وبا کی دوسری لہر کی شدت میں اضافہ، دارلحکومت دہلی میں لاک ڈائون

بھارت میں وبا کی دوسری لہر کی شدت میں اضافہ،  دارلحکومت دہلی میں لاک ڈائون

بھارت میں وبا کی دوسری لہر کی شدت میں اضافہ، ریکارڈ کیسز اور اموات

بھارت میں کرونا وائرس کی دوسری لہر کی شدت میں مسلسل اضافہ ہو رہا ہے۔ پیر کو دو لاکھ 73 سے زیادہ ریکارڈ کیسز رپورٹ ہوئے ہیں۔

بھارت میں مسلسل پانچویں روز دو لاکھ سے زیادہ کیسز رپورٹ ہوئے ہیں جس کے بعد کیسز کی مجموعی تعداد ڈیڑھ کروڑ سے تجاوز کر گئی ہے۔

بھارت کی وزارتِ صحت کے مطابق عالمی وبا سے گزشتہ چوبیس گھنٹوں میں مزید 1619 مریض دم توڑ گئے ہیں۔

ریاست مہاراشٹرا، دہلی اور کرناٹکا میں ایک روز کے دوران ریکارڈ کیسز سامنے آئے ہیں۔ مہاراشٹرا میں 68 ہزار 631، دہلی میں 25 ہزار سے زائد اور کرناٹکا میں 19 ہزار سے زیادہ کیسز رپورٹ ہوئے ہیں۔

ریاست بہار، راجستھان، تامل ناڈو اور مانی پور نے نئی پابندیاں عائد کر دی ہیں جس کے تحت شاپنگ مالز، اسکولز، سنیما اور مذہبی مقامات 15 اپریل تک بند رہیں گے۔

ملک میں ایک ہفتہ میں کورونا کے15.34لاکھ سے زائد کیسز

 ملک میں ایک ہفتہ کے دوران 15.34 لاکھ سے زیادہ افراد جان لیوا اورمہلک ترین عالمی وبا کوروناوائرس سے متاثر ہوئے ہیں۔ملک میں کورونا وائرس (کووڈ ۔19) وبا رکنے کا نام نہیں لے رہا ہے اور حالات دن بہ بدن بد سے بد تر ہوتے جارہے ہیں۔

ایک ہفتہ میں ملک میں کورونا وائرس کے 15.34 لاکھ سے زیادہ کیسز رپورٹ ہوئے ہیں۔ جہاں گذشتہ پیر کے روز کورونا سے متاثرہ افراد کی تعداد 1.35 کروڑ سے زیادہ تھی ، وہیں آج صبح تک کورونا متاثرین کی تعداد 1.50 کروڑ کو عبور کر چکی ہے۔

پیر کی صبح مرکزی وزارت صحت کی جانب سے جاری کردہ تازہ ترین اعداد و شمار کے مطابق گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ملک میں 2،73،810 نئے کیسز درج ہوئے جس سے ملک میں متاثرین کی مجموعی تعداد ایک کروڑ 50 لاکھ 16 ہزار 919 ہوگئی ہے۔

وہیں اسی مدت کے دوران ریکارڈ 1،44،178 مریض صحت مند ہوئے جس سے ملک میں اب تک 1،29،53،821 مریض اس موذی وبا سے شفایاب ہوچکے ہیں۔ ملک میں کورونا کے ایکٹیو کیسزکی تعداد 19 لاکھ کو عبور کرکے 19،29،329 ہوچکے ہیں۔ اسی عرصے میں ، مزید 1619 مریضوں کی موت کے ساتھ ملک میں ہلاک شدگان کی مجموعی تعداد 1،78،769 ہوگئی ہے۔

اب تک ملک میں 12،38،52،566 افراد کو کورونا وائرس کی ویکسین دی جاچکی ہے ۔ملک میں کورونا سے شفایابی کی شرح 86.00 فیصد، ایکٹیو کیسز کی شرح 12.81 فیصد ،اموات کی شرح 1.19 فیصد ہوگئی ہے۔

دلی میں آج رات سے آئندہ پیر کی صبح تک لاک ڈاؤن

 دلی میں کورونا انفیکشن انتہا پر پہنچنے کے بعد حکومت نے آج رات دس بجے سے چھ دنوں کے لئے لاک ڈاؤن نافذ کرنے کا اعلان کیا ہے۔وزیراعلی اروند کیجریوال نے لیفٹننٹ گورنر انل بیجل کے ساتھ میٹنگ کے بعد پریس کانفرنس میں آج رات دس بجے سے آئند پیر کی صبح پانچ بجے تک لاک ڈاؤن کا اعلان کیا ہے۔

اس دوران سبھی ضروری خدمات کو اس سے باہر رکھا گیا ہے۔ کھانے پینے، میڈیکل اور شادی کی تقاریب منعقد ہوں گی۔ شادی کی تقاریب میں 50 لوگ شرکت کرسکیں گے اور اس کے لئے پاس جاری کئے جائیں گے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.